ہر انسان اپنی ذات میں ایک شہر بے مثال

ہر انسان اپنی ذات میں ایک شہر بےمثال

ہر انسان اپنی ذات میں ایک شہر بے مثال ہوتا ہے۔ جس کی اپنی تاریخ ہوتی ہے، جغرافیہ ہوتا ہے، ثقافت ہوتی ہے، اپنے موسم ہوتے ہیں، اقدار وروایات اور تہذیبی تسلسل ہوتا ہے۔ لیکن اس کی شناخت کا ایک حوالہ اس کی عمارتوں کا طرزِ تعمیر، سڑکیں، باغات، چوک، گلیاں اور چوبارے بھی ہوتے ہیں۔ اور وہ پرندے بھی جن کی چہچہاہٹ سے شہر کی فضائوں میں نغمگی گونج اٹھتی ہے۔
جی ہاں ہر انسان کے اندر یہ ساری چیزیں ہوتی ہیں۔ جن سے اس کی شخصیت کے خدوخال کا تعین بھی ہوتا ہے اورکیفیات کے بدلتے رہنے سے زندگی کا تحرک بھی مجسم ہوتا ہے۔

بانو قدسیہ

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: