اپنے مسلمان بھائیوں کے عیبوں کے پیچھے مت پڑو۔۔۔۔۔۔۔۔۔"

اپنے مسلمان بھائی کے عیبوں کے پیچھے

 

حضرت عبداللہ بن عمر ( رضی اللہ تعالیٰ عنہ) سے روایت ہے کہ رسول اکرم (نبی پاک صلی اللہ علیہ وسلم) منبر پر چڑھے اور آپ (نبی پاک صلی اللہ علیہ وسلم) نے بلند آواز سے پکارا اور فرمایا۔۔۔۔
“اے لوگو جو زبان سے اسلام لاۓئے ہو۔۔۔۔ تمہارے دلوں میں ابھی ایمان پوری طرح نہیں اترا ہے۔۔۔ مسلمان بندوں کو ستانے سے۔۔۔۔، شرمندہ کرنے اور ان کے چھپے ہوۓ عیبوں کے پیچھے پڑنے سے باز رہو۔۔۔ کیونکہ اللہ کا قانون ہے کہ جو کوئی اپنے مسلمان بھائی کے عیبوں کے پیچھے پڑے گا ۔۔۔۔اور اسکو رسوا کرنا چاہے گا۔۔۔۔ تو اللہ تعالی اس کے عیوب کے پیچھے پڑے گا۔۔۔۔ اور وہ اسکو ضرور رسوا کرے گا۔۔۔ (اور وہ رسوا ہو کر رہے گا) اگرچہ اپنے گھر کے اندر ہی ہو۔۔۔۔۔۔”
(جامع ترمذی)

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: